بھارت سےمذاکرات

بھارت سےمذاکرات کا کوئی فائدہ نہیں، مقبوضہ کشمیر میں مسلمانوں کی نسل کشی ہونےوالی ہے، عمران خان

اسلام آباد (صباح نیوز) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ بھارت سے مذاکرات کا کوئی فائدہ نہیں، خدشہ ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں مسلمانوں کی نسل کشی ہونےوالی ہے۔ وزیراعظم عمران خان نے امریکی اخبار کو دیئے گئے ایک انٹرویو میں کہا کہ بھارت سے بات چیت کےلئے بہت کچھ کہہ چکاہوں لیکن ، بدقسمتی سے بھارت نے میری باتوں کومحض اطمینان کےلئے لیا.

نئی دلی حکومت نازی جرمنی جیسی ہے، دو ایٹمی طاقتیں آنکھوں میں آنکھیں ڈالے ہوئے ہیں، کچھ بھی ہو سکتا ہے، پاکستان اور بھارت کے درمیان کشیدگی بڑھنے کا خطرہ موجود ہے، دنیا کواس صورتحال سے خبردار رہنا چاہیے، امریکی صدرڈونلڈ ٹرمپ کوانتہائی تباہ کن صورتحال کے خدشے سے آگاہ کردیا ہے.

80 لاکھ کشمیریوں کی جانیں خطرے میں ہیں، خطے میں قیام امن کے لئے بھارت کی طرف کئی بار ہاتھ بڑھایا اور بات چیت کی کوشش کی لیکن بد قسمتی سے بھارت نے ان تمام کوششوں کا مثبت جواب نہیں دیا۔ انہوں نے کہا کہ وہ جب ماضی میں جھانکتے ہیں تو انہیں خطے میں قیام امن کی خواہش اور بھارت سے بات چیت کے لئے کی گئی اپنی تمام کوششیں رائیگاں ہوتی نظر آئیں۔

انہوں نے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت تبدیل کرنے اور وادی میں انسانی حقوق کو پامال کرنے پر بھارت سرکار پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اقوام متحدہ کی امن فوج اور مبصرین مقبوضہ کشمیربھیجے جائیں ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں