روایتی تعلیم 22

نوجوانوں کو روایتی تعلیم سے ہٹ کے جدید تعلیم سے آراستہ کرنا ہو گا،زبیدہ جلال

اسلام آباد:وفاقی وزیر دفاعی پیداوار زبیدہ جلال نے کہا ہے کہ نوجوانوں کو روایتی تعلیم سے ہٹ کے جدید تعلیم سے آراستہ کرنا ہو گا،ہمارے علاقے میں آج بھی انٹر نیٹ کی سہولیات میسر نہیں ،ہمیں ٹیکنالوجی میں آنے والی تبدیلیوں کو تعلیم کا حصہ بنانا ہو گا۔

جمعرات کو اسلام آباد میں منعقد ہونے والے بزنس سمٹ میں بیرون ممالک سے 60 سے زائد سرمایہ کاروں نے شرکت کی ۔بزنس سمٹ میں وفاقی وزیر برائے دفاعی پیداوار زبیدہ جلال نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ نوجوانوں کو مختلف سرگرمیوں میں ڈالنا ضروری ہے ،نوجوانوں کو روایتی تعلیم سے ہٹ کے جدید تعلیم سے آراستہ کرنا ہو گا۔

انہوںنے کہاکہ میں ایسے علاقے سے تعلق رکھتی ہوں جہاں آج بھی انٹرنیٹ کی سہولیات میسر نہیں ،وہاں کے لوگوں کو گوبلائزیشن سے ٹیکنالوجی سے متعارف کروانا ہوگا ۔

انہوںنے کہاکہ ہمیں ٹیکنالوجی میں آنے والی تبدیلیوں کو تعلیم کا حصہ بنانا ہو گا، پارلیمانی سیکرٹری عندلیب عباس نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ ہم حالت جنگ میں ہیں ،باڈرز پر کشیدگی ہے، انہوںنے کہاکہ اقلیتوں کے حوالے سے بات کرنے پر ایک وزیر سے وزرات لے لی گئی،ایسی مثال بھارت سمیت کہیں نہیں ملتی ۔

عندلیب عباس نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ ہماری سرحدوں پر خطرے کے باوجود 60 غیر ملکی افراد کا کانفرس میں شریک ہیں ۔ انہوںنے کہاکہ 25 ممالک کے غیر ملکی افراد کی شرکت پاکستان پر اعتماد کا اظہار ہے۔انہوںنے کہاکہ پاکستان میں سرمایہ کاری آرہی ہے،پاکستان میں 60 فی صد آبادی نوجوانوں ہر مشتمل ہے۔

انہوںنے کہاکہ نوجوانوں کو ملازمت کے مواقع دینا ہو گا۔انہوںنے کہاکہ برطانیہ سمیت 50 ممالک کے شہریوں کو ائیر پورٹ پہنچنے پر ویزہ دیا جائےگا ۔ انہوںنے کہاکہ ایف بی آر کو کہہ دیا ہے سیدھے ہو جائیں یا کوئی اور ایف بی آر لے آئیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں